Jaun Elia

جون ایلیا

یہ تو بڑھتی ہی چلی جاتی ہے میعاد ستم


جز حریفان ستم کس کو پکارا جائے


وقت نے ایک ہی نکتہ تو کیا ہے تعلیم


حاکم وقت کو مسند سے اتارا جائے



www.000webhost.com